نظم | کیمرا -محمد ذکی احمد


کیمرے کا شٹر کھلتے ہی
بڑی حسین ہے یہ دنیا
تیرے سامنے سبھی مسکراتے ھیں
کہ تصویر اچھی آتی ہے
دو آنکھوں کے رستے
تصویر جو دل میں اترتی ہے
اسکا کیا؟؟؟
نفرتیں عداوتیں کدورتیں
بغض و کینہ
ایڈٹ کرنے کی ہیں چیزیں
تفاوت ہے
کیمرے کے سامنے اور پیچھے
جیسے۔۔۔
باھر مسکراہٹیں
اندر عداوتیں
ظاہر میں مستیاں
باطن میں خالی پن
کہاں کعبہ کہاں صنم
تصویروں میں قید دنیا
اچھی لگتی ہے
وہ بولتی ہیں
چیختی بھی ہیں
آنسو خوشی کے غم کے
سنجوئے ہیں
وہ وادیاں وہ فضائیں
وہ پیار کا موسم
اور ہم تم
اگتا سورج ڈھلتی شام
یا پورا چاند
لہلہاتے کھیت کبھی صحرا
وادیاں کبھی ندیاں
یادوں کے جھروکے
اور بہت کچھ
سب اچھا لگتا ہے
کاش کہ یہ جگ سارا
سندر ہوتا
تصویروں جیسا۔۔۔
Awaam India

Awaam India

Awaam India is online platform founded by researchers and senior students of Aligarh Muslim University, Aligarh. Awaam stands for dissemination and promotion of progressive and constructive ideas in the society.

%d bloggers like this: